My Trade Union

ہاٸی کورٹ کا اسٹے آرڈر ۔ سیسی انتظامیہ نے ہوا میں اڑا دیا
URDU

ہاٸی کورٹ کا اسٹے آرڈر ۔ سیسی انتظامیہ نے ہوا میں اڑا دیا

Jul 30, 2023

کراچی ( روپوٹ۔۔ شاہد غزالی) محکمہ محنت کے ذیلی ادارے سندھ ایمپلائز سوشل سیکورٹی انسٹی ٹیوشن SESSI میں سندھ ہائی کورٹ کیس نمبر 1266/23 میں غیر قانونی بھرتی اور ہوسٹنگ آرڈرز کو فوری طور پر روکنے کے حکم نامہ کو بری طرح نظر انداز کر کے سیسی انتظامی رات دیر تک اور چھٹی کے دنوں میں بھی ورکنگ کرتی رہی ہے۔

27 جولائی 2023 کو سندھ ہائی کورٹ، کراچی کے جاری کردہ حکم نامہ جس میں آئندہ سماعت تک یعنی 17 اگست 2023 تک سیکرٹری محنت لیئق احمد، کمشنر سوشل سیکورٹی سلم رضا کھوڑو، ڈائریکٹر ایڈمنسٹریشن زاہد بٹ کو غیر قانونی بھرتیوں اور ان کے پوسٹنگ ارڈرز کو روکنے کے واضح احکامات وصول ہو جانے کے باوجود سیسی انتظامیہ نے 27 جولائی کی رات ہی دیر گئے تک اور عاشورہ کی چھٹی کے دنوں میں بھی سوشل سیکیورٹی ہیڈ آفس میں غیر قانونی بھرتیوں کے پوسٹنگ آرڈر جاری کئے ہیں۔

اطلاعات کے مطابق سوشل سیکیورٹی کے تمام فیلڈ آفیسرز (ایم ایس، سی ایم اوز اور ڈائریکٹرز) کو پابند کیا گیا ہے کہ چھٹیوں کے فوری بعد 31 جولائی 2023 کو صبح ان تمام غیر قانونی طور پر بھرتی کئے گئے افراد کی جوائننگ 27 جولائی سے پہلے کی تاریخوں میں لی جائے

جس کے لئے خاص طور پر سیسی ولیکا اسپتال، لانڈھی اسپتال، کوٹری اسپتال، حیدرآباد اسپتال اور کڈنی ہسپتال کے میڈیکل سپرنٹینڈنٹ کے ساتھ ساتھ چیف میڈیکل آفیسر کورنگی سرکل، لانڈھی سرکل، سائٹ سرکل، سٹی سرکل، کوٹری سرکل اور حیدرآباد سرکل کو سیسی کی کرپٹ انتظامیہ کی جانب اس ہدایت پر عمل کرنے کا پابند کیا گیا ہے۔

اگر یہ افسران سندھ ہائیکورٹ کے احکامات کی خلاف ورزی کرتے ہوئے پرانی تاریخوں میں ڈاکٹرز کی جوائنگ لیتے ہیں تو یہ بھی توہین عدالت کے مرتکب ہونگے۔ اور سیسی کی کرپٹ مافیا کے ساتھ ان کو بھی سنگین نتائج کا سامنا کرنا پڑے گا۔

اہم بات یہ ہے کہ سیسی انتظامیہ ان افسران کے ٹرانسفر کرنے کی پوزیشن میں بھی نہیں ہے، اگر ان افسران کو غیر قانونی حکم نہ مانے پر 31 جولائی بروز پیر تبادلہ کیا جاتا ہے یا انھیں پوسٹنگ سے ہٹایا جاتا ہے تو پھر پرانی تاریخ میں گریڈ 17 میں بھرتی ہونے والے ڈاکٹرز و دیگر کی غیرقانونی بھرتیوں کا منصوبہ خود ہی نا کام ہو جائے گا۔

اب دیکھنا یہ ہے کہ جس حکومت کے جانے میں ایک ہفتہ بھی باقی نہیں رہ گیا ہے۔ یہ افسران اس کے غیرقانونی احکامات کو ماننے سے انکار کرتے ہیں یا اس کا حصہ بننا پسند کرتے ہیں۔

اس موقع پر اگر پرنٹ اینڈ الیکٹرانک میڈیا یا سوشل میڈیا سے وابستہ افراد 31 جولائی 2023 بروز پیر کے دن سیسی کے تمام فیلڈ آفس میں اپنے نمائندگان کو بھیج کر سندھ ہائی کی حکم نامہ کو ہوا میں اڑانے کے مناظر اور حقائق کو کیمرے کی انکھ میں محفوظ کرنے اور بوقت ضرورت منظر عام پر لاکر اس بڑے پیمانے پر کی جانے والی کرپشن کا راز فاش کرنے کے تیار ہو جاتے ہیں تو کرپٹ مافیا کا منصوبہ خودبخود ناکام ہو جائے گا۔

 

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *