My Trade Union

سندھ حکومت کے آخری ایام ۔ جلد بازیاں، سیسی گورننگ باڈی کا ایک دن کے نوٹس پر اجلاس بلا لیا
URDU

سندھ حکومت کے آخری ایام ۔ جلد بازیاں، سیسی گورننگ باڈی کا ایک دن کے نوٹس پر اجلاس بلا لیا

Aug 4, 2023

کراچی (رپورٹ شاہد غزالی ) سندھ حکومت کی جانب سے آخری دنوں میں غیر قانونی اقدامات کو قانونی بنانے کے لیے اچھل کود میں تیزی آگٸی۔ سندھ سوشل سیکورٹی کی گورننگ باڈی کا اجلاس ایک روز کے نوٹس پر طلب کر لیا گیا تاکہ جاتے جاتے سیسی کے کرپشن کے معاملات کو قانونی شکل میں ڈھالا جاسکے۔ تفصیلات کے مطابق ان اطلاعات کے بعد کہ محنت کشوں کی نمائندہ فیڈریشنز کی جانب سے سیسی کی موجودہ گورننگ باڈی کے نوٹیفکیشن کو سندھ ہائیکورٹ میں چیلنج کیا جا رہا یے۔ سندھ سوشل سیکورٹی کی کرپٹ مافیا نے اپنے ماضی میں کئے گئے تمام غلط اور غیرقانونی کی منظوری کے لیے نئی گورننگ باڈی سیسی کو 24 گھنٹے سے بھی کم وقت میں بغیر ایجنڈا بتاے اجلاس میں طلب کرلیا ہے۔ جیسے جیسے صوبائی حکومت کی مدت ختم ہوتی جارہی ہے سیسی میں لوٹ مار کا بازار اتنا گرم ہوتا جا رہا ہے۔ ایک روز قبل سندھ ایمپلائز سوشل انسٹی ٹیوشن کی گورننگ باڈی کا نوٹیفکیشن جاری ہوا تھا۔ اور دوسرے روز ہی یعنی کل جمعہ کے روز دوپہر میں تمام ممبران کو چیئرمین گورننگ باڈی و صوبائی وزیر محنت کے ریفرنس سے فون پر اطلاع دی گئی کہ ہفتہ کو (سرکاری چھٹی کے روز) صبح 11 بجے سندھ اسمبلی بلڈنگ میں سیسی کی نومنتخب گورننگ باڈی کا ایم ہنگامی اجلاس منعقد کیا گیا ہے جب شام کو ڈائریکٹر ایڈمنسٹریشن زاہد بٹ کے دستخط سے لیٹر نمبر 2023/148 جاری کیا گیا تو اس پر 2 اگست کی تاریخ درج تھی۔ جب کہ ممبران کو 4 اگست کی دوپہر کو فون کر کے اطلاع دی گئی تھی اسکا صاف مطلب ہے کہ گورننگ باڈی کی میٹنگ بلانے کے لیے پیچھلی تاریخوں میں لیٹر جاری کیا گیا ہے۔ جیسا کہ ڈاکٹرز کے غیر قانونی بھرتیوں میں پیچھلی تاریخوں میں اپائنٹمنٹ لیٹر اور جوائنگ لی گئی ہے۔ مصدقہ اطلاعات ہیں کہ اس اجلاس میں کمشنر سیسی سیلم رضا کھوڑو اور ڈائریکٹر میڈیکل ایڈمنسٹریشن ڈاکٹر مصطفیٰ ابڑو کے دستخط سے تیار ہونے والے ورکنگ پیپر میں 200 کے قریب ان ملازمین کو مستقل کرنے کی کوشش کی جائے گی جن کی بھرتیوں کو سندھ ہائیکورٹ کیس نمبر 5343/2021 غیر قانونی قرار دے چکا ہے۔ اور پچھلی گورننگ باڈی ان ملازمین کو ریگولائز کرنے درخواست کو تین مرتبہ مسترد کرچکی ہے۔ اس علاؤہ بھی کئی اور ایسے معاملات کی بھی منظوری لینی ہے جس کے بعد سیسی کے کرپٹ افسران کے ماضی کے گئے غیر قانونی کاموں کو قانونی تحفظ مل جائے گا۔ حیرت کی بات یہ ہے کہ گورننگ باڈی کی اس میٹنگ کا کوئی ایجنڈا جاری نہیں کیا گیا ہے جب کہ قانونی طور سیسی انتظامیہ پابند ہے کہ چودہ روز قبل تمام ممبران کو میٹنگ کا ایجنڈا اور ورکنگ پیپرز کی کاپیاں فراہم کرے..

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *