My Trade Union

نام نہاد پی ایف یو جے کا سربراہ الزام تراشی کے علاوہ کچھ نہیں کرسکتا۔ احتشام الحق انفارميشن سیکریٹر پی ایف لو جےی
URDU

نام نہاد پی ایف یو جے کا سربراہ الزام تراشی کے علاوہ کچھ نہیں کرسکتا۔ احتشام الحق انفارميشن سیکریٹر پی ایف لو جےی

Aug 22, 2023

اسلام آباد۔۔۔۔پاکستان فیڈرل یونین آف جرنلسٹس کے سیکرٹری اطلاعات احتشام الحق نے
پی ایف یو جے کے نام نہاد دھڑے کے پروپگنڈے کا بھر پور جواب دیتے ہو ٸے کہا ہے کہ ایک نام نہاد اور خودساختہ دھڑا جو خود کو پی ایف یو جے قرار دیتا ہے اپنی تمام تر کوششوں کے باوجود عالمی سطح پر کوئی پذیرائی نہ ملنے اور ملک میں بھی اسلام آباد تک محدود ہونے پر کئی سال سے بوکھلاہٹ کا شکار ہے اس دھڑے کے نام نہاد سربراہ کا کام صرف الزام تراشی ہے کبھی عملی صحافت کے قریب بھی نہیں گزرے یہ الزام نہیں ریکارڈ کی بات ہے، اب موصوف ہر سطح پر اپنی ناکامیوں کا بوجھ اٹھاتے اٹھاتے تھک چکے ہیں اور ملک میں صحافیوں کی سب سے بڑی غیرمتنازع تنظیم پی ایف یوجے جسے عالمی سطح پر بھی تسلیم کیا جاتا ہے اس پر گمراہ کن اور گھٹیا الزامات لگانے کا آغاز کرچکے ہیں۔ موصوف نے پاکستان میں مقیم افغان جرنلسٹوں کے لیے آئی ایف جے کی جانب سے سیف ہاﺅسزسے متعلق خبر کو گمراہ کن انداز میں پیش کرنے کی کوشش کی ہے اور کہا ہے کہ انھیں آئی ایف جے کی جانب سے کوئی فنڈز نہیں ملے۔ ان کی اطلاع کے لیے عرض ہے کہ آپ جو چاہیں الزامات لگائیں کیونکہ اس میں آپ نے پی ایچ ڈی کررکھی ہے بلاشبہ اس میں آپ کا کوئی مقابلہ نہیں کرسکتا مگر حقیقت یہی ہے کہ صدر جی ایم جمالی اور سیکریٹری جنرل رانا محمد عظیم کی قیادت میں کام کرنے والی پی ایف یو جے ہی اصل ہے جس کو عالمی سطح پر تسلیم کیا جاتا ہے اور وہ آئی ایف جے کے ساتھ مل کر مختلف پراجیکٹس پر کام کر رہی ہے جس میں گزشتہ دو سال سے افغان جرنلسٹوں کے لئے سیف ہاوس قائم کئے گے ہیں جن میں درجنوں صحافیوں کی فیملیز نے قیام کیا اور انہیں کھانے پینے کے علاوہ میڈیکل کی سہولیات بھی فراہم کی گئیں اور آئی ایف جے کو اپلائی کرنے والی درجنوں فیملیز کی درخواستوں کی منظوری اور آئی ایف جے کی سفارشات پر مالی مدد بھی کی گئی ۔ پی ایف یو جے نے نہ صرف درجنوں افغان جرنلسٹوں کو افغانستان سے پاکسان آنے میں مدد کی بلکہ انہیں غیر ممالک کے ویزے حاصل کرنے میں مدد بھی فراہم کی اور یہ افغان صحافی اس وقت فرانس، مکدونیا، جرمنی اور دیگر ملکوں میں جاچکے ہیں۔ اصل پی ایف یو جے ذاتی مفادات اور پبلسٹی کے بجائے آئی ایف جے کی مدد اور ذاتی کاوشوں سے جمع کئے گئے فنڈز سے کمیونٹی کے لئے کام کرنے پر یقین رکھتی ہے۔ الزام لگانے والے اس نام نہاد لیڈر کے لئے صرف اتنا ہی عرض ہے۔

اوروں کے عیب چھوڑ درزی سے جا کہ کہہ۔۔
اتنی جگہ تو چھوڑ کہ گریبان دکھائی دے۔۔!!

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *