My Trade Union

آجر مزدوروں کے مفادات کا تحفظ، اور بروقت اجرت ادا کریں، نگران وزیر قانون بیرسٹرعمر سومرو
URDU

آجر مزدوروں کے مفادات کا تحفظ، اور بروقت اجرت ادا کریں، نگران وزیر قانون بیرسٹرعمر سومرو

Sep 30, 2023

کراچی ( ٹریڈ یونین )    سندھ کے نگراں وزیر برائے قانون و مذہبی اموربیرسٹر محمد عمر سومرو نے کہا ہے کہ مزدوروں کے زیادہ تر معیارات پہلے ہی 1500 سال پہلے نازل ہونے والے قرآن و سنت کے مطابق ہیں۔آجروں کا فرض ہے کہ وہ مزدوروں کے مفادات کا تحفظ کریں اور انہیں تمام مطلوبہ سہولیات کی فراہمی سمیت بروقت اجرت ادا کریں تاکہ ایک مطمئن ورکر محنت و لگن سے کام کرے اورادارے کو منافع بخش بنا سکے۔یہ بات انہوں نے ایمپلائرز فیڈریشن پاکستان کے زیراہتمام 17ویں پیشہ ورانہ سیفٹی، ہیلتھ اور انوائرمنٹ ایوارڈز برائے سال 2022 کی تقسیم تقریب سے خطاب کر تے ہوئے کہی۔اس موقع پر صدر ای یف پی ملک طاہر جاوید، آئی ایل او کنٹری ڈائریکٹر گیئر ٹینسٹوئل، سابق صدر مجید عزیز، نائب صدر فیروز عالم، بورڈ آف ڈائریکٹرز کے ممبران میاں اکرم فرید، ڈاکٹر یوسف سرور، ہمایوں نذیر اور اطہر اقبال، پاکستان ورکرز فیڈریشن کے رہنما ظہور اعوان اور سائیٹ سیورز کی سی ای او منزہ گیلانی بھی موجود تھیں۔

نگراں وزیر نے قرآن پاک اور سنت نبوی صلی اللہ علیہ وسلم کے تفصیلی حوالہ جات پیش کیے جو آجر اور ورکرزکے درمیان صحت مند تعلقات کی اہمیت کو ظاہر کرتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ یہ صرف اجرت ہی نہیں بلکہ ٹرانسپورٹیشن، فیملی کیئر جیسی سہولیات اور اس بات کو یقینی بنانا ہے کہ ورکرز کو معاہدے کے مطابق ادائیگی کی جائے اور اسے کام کے مقام پر ہراساں نہ کیا جائے۔یہ امر خوش آئند ہے کہ بہت سے روشن خیال آجر آئی ایل و کے تمام بین الاقوامی لیبر معیارات کی مکمل تعمیل کرتے ہیں اور اس سے پاکستان کے امیج پر مثبت اثرات مرتب ہوتے ہیں۔

صدر ای ایف پی ملک طاہر جاوید نے اپنے خیرمقدمی کلمات میں کہا کہ پیشہ ورانہ سیفٹی، ہیلتھ اور انوائرمنٹ دراصل گھر سے شروع ہوتی ہے اور ہم آجر کام کی جگہ پر اوش کی اہمیت سے پوری طرح واقف ہیں۔ای ایف پی نے ہمیشہ اپنی ممبرز کمپنیوں کو تمام بین الاقوامی لیبر معیارات کی مکمل تعمیل کرنے کا پابند بنایا ہے جس میں چائلڈ لیبر کا خاتمہ، کام کی جگہ پر عدم تشدد اور مزدوروں کو اجرت اور معاوضے کی بروقت ادائیگی شامل ہے۔

آئی ایل اوکنٹری ڈائریکٹر برائے پاکستان گیئر ٹینسٹوئل نے بتایا کہ حکومت پاکستان آئی ایل او کے بنیادی اوش کنونشن نمبر 155 اور نمبر 187 کی توثیق کے لیے سرگرم عمل ہے اور ان دونوں کنونشنز کی توثیق پاکستان کے عزم کو مزید ظاہر کرے گی۔پاکستان ورکرز فیڈریشن کے رہنما ظہور اعوان نے اس حقیقت کو اجاگر کیا کہ جون 2023 میں آئی ایل سی میں کانفرنس میں اوش کی اہمیت کو مزید مستحکم کرنے کے لیے اوش پر کنونشن 155 اور 187 کو اپنایا جو کنونشنز کے ذریعے ہے اور اب کاروباری اداروں کے لیے ہے کہ وہ یورپی یونین کے جی ایس پی پلس کے معاملے میں تعمیل کریں۔کنٹری ڈائریکٹر سائٹ سیورز منزہ گیلانی نے ہیلتھ و سیفٹی کو فروغ دینے میں اجتماعی کوششوں کی اہمیت پر زور دیا۔
ای ایف پی کے نائب صدر محمد فیروز عالم نے بتایا کہ ہیلتھ، سیفٹی اور انوائرمنٹ کے متعدد شعبوں میں بین الاقوامی معیارات پر غور کیا جاتا ہے۔6بین الاقوامی سطح پر تسلیم شدہ ماہرین کی ایک کمیٹی نے تمام اندراجات کی جانچ پڑتال کی اور آزادانہ طور پر جیتنے والی کمپنیوں کو خالص میرٹ پر منتخب کیا۔

ای ایف پی بیسٹ پریکٹسز اوش ایوارڈ ماری پیٹرولیم،سنرجیک،ر پاک عرب ریفائنری کو تیل وگیس شعبوں میں دیا گیا۔بجلی،پاور سیکٹر میں کے الیکٹرک، ٹی این بی ریپئر اینڈ مینٹینس ایس ڈی یم بی ایچ ڈی، ہاربن الیکٹرک انٹرنیشنل او اینڈایم،کیمیکل،پیٹروکیمیکل،پروسیسنگ،الائیڈ سیکٹر میں اینگرو فرٹیلائزرز، ٹرائی پیک فلمز،لوٹے کیمیکل،فوڈ،ایف ایم سی جی سیکٹر میں کورونیٹ فوڈز،انگلش بسکٹ مینوفیکچررز،صحت اور دواسازی شعبے میں مارٹن ڈاؤ،گیٹز فارما، آسٹولا پلانٹ گیٹز فارما،خدمات کے شعبے میں پی ٹی سی ایل، ایس جی ایس پاکستان،ٹیکسٹائل، لیدر،کھیلوں کے شعبے میں فارورڈ اسپورٹس، انٹرلوپ،آرٹسٹک ملنرز،انجینئرنگ، آٹوموبائلِاسپیئر پارٹس،کمپونینٹ شعبے میں انٹرنیشنل اسٹیلز، اٹلس بیٹری،تھل انجینئرنگ کو ایوارڈز دیے گئے جبکہ 24 اداروں کو ان کی کاوشوں کے اعتراف میں ریکگنیشن شیلڈز بھی دی گئیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *