My Trade Union

نیشنل ریفاٸنری کنٹریکٹرز ورکرز یونین کا کامیاب معاہدہ، تنخواہوں میں 20 فیصد اضافہ
URDU

نیشنل ریفاٸنری کنٹریکٹرز ورکرز یونین کا کامیاب معاہدہ، تنخواہوں میں 20 فیصد اضافہ

Oct 1, 2023

کراچی (ٹریڈ یونین)     نیشنل ریفاٸنری کنٹریکٹرز ورکرز یونین اور انتظامیہ کے درمیان معاہدہ طے پاگیا۔ معاہدے کے تحت ملازمین کی تنخواہ میں 20 فیصد اضافہ کردیا گیا۔ یونین کے کامیاب معاہدے کے اعلان کے لیے کورنگی کے ایک مقامی ہال میں تقریب کا اھتمام کیا گیا۔تقریب میں پاکستان ورکرز فیڈریشن کے مرکزی جنرل سیکریٹری وقار میمن اور دیگر ٹریڈ یونین رہنماوں نے شرکت کی۔ یونین کے جنرل سیکریٹری شاکر محمود صدیقی جب اسٹیج پرآٸے تو ممبران نے انکا پرتپاک استقبال کیا۔ شاکر محمود صدیقی نے انتظامیہ سے پانے والے کامیاب معاہدے کی تفصیلات سے یونین ممبران کو آگاہ کیا تو خود بھی آبدیدہ ہو گیے ۔انھوں نے اس موقع پر ورکرز کو مبارک باد پیش کرتے ہوٸے کہا کہ یہ کامیابی ان کی جدوجہد کا ثمر ہے۔ انھوں نے مزید کہا کہ 18 ماہ بعد انتھک کوششوں سے یہ معاہدہ طے پایا ہے ۔ورکرز نے ڈیمانڈ میں ملنے والی مراعات پر خوشی کا اظہار کیا اور یونین رہنماوں کے حق میں نعرے بھی لگاٸے اس موقع پر شاکر محمود صدیقی نے وزنامہ جسارت مزدور پیج کے انچارج باباٸے مزدور صحافت قاضی سراج کو یاد کرتے ہوٸے کہا کہ آج 22 سال بعد پہلا موقع ہے کہ ہم ان کے بغیر یہ تقریب منعقد کررہے ہیں ۔شاکر محمود صدیقی کا کہنا تھا کہ مزدور تحریکیں زوال پذیر کیوں ہیں اسکی بنیادی وجہ ذاتی مفاد، لیبر قوانین کی آگاہی نہ ہونا،گروپ بندی،اداروں کے مالکان سے مراسم اور کسی حد تک سیاسی جماعتوں سے وابستگیاں رکھنا ہے۔ یونین کے صدر ساجد محمود ملک نے یونین کے دیگر معاملات ورکرز ویلفیٸر بورڈ،ای اوبی آٸی، گریجوٹی اور ایجوکشن کے معاملات سے آگاہ کرتے ہوٸے ورکرز کو کامیاب معاہدے پر مبارک باد پیش کی۔ پاکستان ورکرز فیڈریشن کے وقار میمن نے کامیاب معاہدے پر یونین کے صدر اور جنرل سیکریٹری اور ورکرز کو مبارک باد پیش کرتے ہوٸے کہا کہ شاکر محمود جیسے کم لیڈر ہوتے ہیں اور انکے ساتھی بھی سیسہ پلاٸی ہوٸی دیوار ثابت ہوٸے ہیں۔ عمرہ کی سعادت کے لیے ہونے والی قرعہ اندازی میں قرعہ فال آصف علی زیدی،محمود عبدالغفار،اور محمد کامران کے نام نکلا۔ اورحج کی سعادت کے لیے آصف علی زیدی ،امجد عزیز، ھشتمند خان اور محمد اعجاز کا نام نکلا۔ تقریب کے اختتام پرکیک کاٹا گیا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *