My Trade Union

محنت کشوں کو علاج  کے بجاٸے پریشانیاں، ون ونڈو آپریشن سے سہولیات دی جاٸیں۔  مختار اعوان ،زھرہ خان کا ولیکاہسپتال کا دورہ
URDU

محنت کشوں کو علاج کے بجاٸے پریشانیاں، ون ونڈو آپریشن سے سہولیات دی جاٸیں۔ مختار اعوان ،زھرہ خان کا ولیکاہسپتال کا دورہ

Nov 12, 2023

ڈسپنسریاں اپناکام نہیں کررہیں۔ بے نظیر مزدور کارڈ پر محنت کش کی فیملی کا علاج نہیں ہورہا۔ ہسپتال میں داخلے کی اپروول کے لیے مریض پریشان ،ایک مریض کو انتقال کے بعد داخلے کی اپروول ملی۔ گورننگ باڈی میں ان معاملات کو اٹھاٸیں گے

کراچی (رپورٹ شاہد غزالی)   سندھ ایمپلاٸیز سوشل سیکورٹی انسٹیٹیوشن کی گورننگ باڈی کے ممبران مزدور رہنما متحدہ لیبر فیڈریشن کے مرکزی سیکریٹری جنرل مختار حسین اعوان اور زھرہ خان نے ولیکا ہسپتال کا دورہ کر کے مختلف شعبہ جات کا معاٸنہ کیا اور ہسپتال کے ایم ایس سے بھی ملاقات کی ۔ مختار حسین اعوان نے ھفت روزہ ٹریڈ یونین کو اپنے دورے کی تفصیلات بتاتے ہوٸے انھوں نے کہا کہ ولیکا ہسپتال میں محنت کشوں کو طبی سہولیات فراہم کرنے کے بجاٸے مختلف حیلے بہانوں سے تنگ کیا جارہا ہے انھوں نے حیرت کا اظہار کرتے ہوٸےکہا کہ محنت کش جب علاج و معالجے کے لیے جب ہسپتال جاتا ہے اور اپنا بے نظیر مزدور کارڈ ہسپتال میں دیتا ہے تو کمپوٹر پر اسکی فیملی کا ریکارڈ ظاہر نہیں ہوتا جسکی وجہ سے اسکی فیملی ممبران کو علاج کی سہولت نہیں دی جارہی جو انتہاٸی غفلت اور نااھلی ہے یہ کارڈ نادرا سے بنواٸے گیے ہیں تو پھر اسکی فیملی کا ریکارڈ نہ ملنا حیرت کی بات ہے سندھ حکومت اسکا فوری نوٹس لے۔ مختار اعوان کا کہنا تھا کہ ان ہسپتالوں میں ون ونڈو آپریشن ہونا چاہیے اور محنت کشوں کو مختلف شعبوں سے کلٸیرنس کرانے کے بجاٸے ایک ہی جگہ سے تمام طبی سہولتیں دی جانا چاہیے۔انھوں نے انکشاف کیا کہ یہاں محنت کش کو کسی بیماری کے سلسلے میں محکمہ سے اپروول لینا پڑتا ہے ایک محنت کش کے ہسپتال میں داخلے کا اپروول اسکے انتقال کے بعد ملا۔ انھوں نے بتایا کہ ہسپتال کے ایم ایس سے محنت کشوں کی شکایات کے حوالے سے تفصیلی بات چیت ہوٸی۔ انھوں نے کہا کہ جب ولیکا ہسپتال کا میڈیکل آفیسر مریض کو پٹیل ہسپتال بھیجنے کی اپروول دے رہا ہے تو اس کے آرڈر کو خود عملدرآمد کرانا چاہیے لیکن یہاں پر غریب اور ان پڑھ مزدور کے ہاتھ میں فاٸل دےکر کہا جاتا ہے کہ فلاں دفتر سے اسکی اپروول کرا کر لاو۔ڈسپنسریوں کا برا حال ہے وہاں نزلہ زکام کے مریض کو بھی علاج اور دوا دینے کے بجاٸے M15 فارم دے کر ولیکا ہسپتال بھیج دیا جاتا ہے جس کی وجہ سے یہاں رش بڑھ جاتا ہے انھوں نے مطالبہ کیا کہ ڈسپنسیریوں میں بھی دو شفٹیں ہوناچاہیں۔ہسپتال میں ایکسرے مشینیں خراب پڑی ہیں انھیں درست نہیں کیا جارہا ۔ اس موقع پران کے ہمراہ ورکرز ایکشن کمیٹی کے رہنما بھی موجود تھے ۔مختار حسین اعوان اور زھرہ خان نے کہا کہ وہ ان معاملات کو گورننگ باڈی میں اٹھاٸیں گے اور محنت کشوں کو ون ونڈو آپریشن کے ذریعے علاج ومعالجے کی سہولیات کی فراہمی کے لیے اپنی کوششیں جاری رکھیں گے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *